خواجہ سعد رفیق نے فواد چودھری کو 5 ارب روپے ہرجانے کا نوٹس بھجوا دیا


(عمر اسلم) وفاقی وزیر ریلویز خواجہ سعد رفیق نے تحریک انصاف کے رہنما چودھری فواد حسین کو 22 فروری کی میڈیا ٹاک میں جھوٹے الزامات لگانے پر 5 ارب روپے ہرجانے کا لیگل نوٹس بھجوا دیا۔

خواجہ سعد رفیق کی جانب سے بھیجے گئے نوٹس میں کہا گیا ہےکہ آئینِ پاکستان ہر شخص کو اپنی عزت اور ساکھ کی حفاظت کی ضمانت دیتا ہے، کسی شخص کو حق نہیں کہ قانونی وجہ کے بغیر کسی کے بارے میں ہتک آمیز بیانات دے۔ خواجہ سعد رفیق عوام کے ووٹوں کی طاقت سے پارلیمان کے رکن بنے ہیں، انہوں نے خسارے کا شکار دم توڑتے قومی ادارے کو بحالی، ترقی اور جدت دی، پروپیگنڈا کا مقصد الیکشن سے قبل وزیر ریلوے کی شہرت کو نقصان پہنچانا،ان کے سرکاری کام میں خلل ڈالنا اور قومی ذمے داریوں کی بجا آوری پر اثرانداز ہونا ہے۔

لیگل نوٹس میں کہا گیا ہے کہ فواد چوہدری اس ہرزہ سرائی پر قوم کے سامنے غیر مشروط معافی مانگے۔ اگر چودہ دن میں معافی نہ مانگی گئی تو وزیر ریلوے قانونی چارہ جوئی کا حق محفوظ رکھتے ہیں۔

واضح رہے کہ سعد رفیق نے فواد چودھری کو ایڈووکیٹ سپریم کورٹ نجیب فیصل چودھری کے ذریعے پیراگون سٹی کا مالک قرار دینے، بھائی کو آشیانہ اقبال کا چودہ ارب کا ٹھیکہ دلوانے اور کرپشن کے بے بنیاد الزامات پر لیگل نوٹس بھجوایا۔