سیاسی پارہ ہائی۔۔ حکومت اور اپوزیشن کے قافلے اسلام آباد کی طرف رواں دواں

مسلم لیگ ن کا مہنگائی مکاؤ مارچ اسلام آباد کی جانب رواں دواں
کیپشن: PML N Long March Towards Islamabad.
Stay tunned with 24 News HD Android App
Get it on Google Play

ویب ڈیسک: حکمران جماعت تحریک انصاف کی جانب سے امر بالمعروف کے عنوان سے جلسے  کے سلسلہ میں چھوٹے بڑے شہروں سے قافلے اسلام آباد کی جانب رواں دواں ہوگئے ہیں جبکہ مسلم لیگ ن اور جمعیت علمائے اسلام ف کی جانب سے بھی مہنگائی مکاؤ مارچ کے سلسلے میں قافلے اسلام آباد کی طرف روانہ ہونا شروع ہوگئے ہیں۔

ملکی سیاست میں گہما گہمی، سیاسی پارہ ہائی۔۔ حکومت اور اپوزیشن کے ملک بھر سے قافلے شہر اقتدار کی جانب رواں دواں ہیں۔ 

 تحریک انصاف کے 27 مارچ کے جلسے میں شرکت کے لئے کراچی کینٹ اسٹیشن سے قافلہ خصوصی ٹرین کے ذریعے اسلام آباد روانہ ہوگیا ہے۔ پی ٹی آئی کا قافلہ رکن قومی اسمبلی آفتاب صدیقی اور رکن سندھ اسمبلی شہزاد قریشی کی قیادت میں روانہ ہوا۔

خصوصی ٹرین کے ذریعے خواتین اور مرد پی ٹی آئی کارکنان کی بڑی تعداد روانہ ہوئی، کارکنان کے لیے خصوصی ٹرین میں 18 بوگیاں لگائی گئی ہیں۔

دوسری جانب پی ٹی آئی جلسہ میں شرکت کے لیے وزیراعلیٰ گلگت بلتستان خالد خورشید کی قیادت میں قافلہ اسلام آباد پہنچ گیا ہے۔

میڈیا کوآرڈینیٹر وزیراعلیٰ کے مطابق وزیراعلیٰ کے ہمراہ ہزاروں لوگ جلسے میں شرکت کے لیے پہنچ چکے ہیں، وزیراعلیٰ آئی ٹین گراؤنڈ میں جلسے سے شرکاء سے خطاب کریں گے۔

عالم نور حیدر نے بتایا کہ گلگت بلتستان کے عوام محبوب لیڈر عمران خان پر اعتماد کا اظہار کریں گے اور لوگ روایتی ٹوپی پہن کر کل جلسے میں شریک ہوں گے۔

دوسری جانب مہنگائی مکاؤ مارچ کے لئے اپوزیشن کے قافلے 28 مارچ کو اسلام آباد پہنچیں گے۔ مسلم لیگ ن کے نائب صدور مریم نواز اور حمزہ شہباز کی قیادت میں مہنگائی مکاؤ لانگ مارچ کا آغاز آج ماڈل ٹاون سے ہوا۔آج رات گوجرانوالہ میں پہلا پڑاؤ ہوگا۔

حمزہ شہباز کا کہنا ہے کہ عمران خان کو بنی گالا سے اتارکر عوام کی عدالت میں پیش کریں گے۔

واضح رہے کہ آج ہونے والے لانگ مارچ سے متعلق ن لیگ کی نائب صدر مریم نواز اور پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز نے گزشتہ روز ماڈل ٹاؤن لاہور میں کارکنوں سے خطاب بھی کیا تھا۔

 شہر بھر میں لانگ مارچ کے حوالے سے بینرز لگا دیے گئے ہیں۔ شاہدرہ، اسلامپورہ، فیروزپور روڈ، ٹھوکر نیاز بیگ سمیت مختلف مقامات پر لانگ مارچ کے بینرز آویزاں ہیں۔

پاکستان مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب نے مہنگائی مکاؤ مارچ میں بھرپور شرکت کی عوامی دعوت دی ہے۔

مسلم لیگ ن کے رہنما اپنے اپنے حلقوں سے ریلیوں کی صورت میں تین مختلف مقامات پر پہنچیں گے۔ 27 مارچ کو مہنگائی مکاؤ مارچ گوجرانولہ سے اسلام آباد روانہ ہوگا۔

ترجمان مسلم لیگ ن خیبر پختونخوا اختیار ولی خان کے مطابق لانگ مارچ کے لیے مسلم لیگ ن خیبر پختونخوا کا قافلہ 28 مارچ کو پشاور سے روانہ ہوگا۔

ادھر جمعیت علماء اسلام (ف) نے حکومت کے خلاف مہنگائی مارچ کے شیڈول کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ  تمام قافلے 26 مارچ کی شام اسلام آباد میں داخل ہوں گے اور سری نگر ہائی وے پر جمع ہوں گے۔ڈیرہ اسماعیل خان سے جے یو آئی ف کا مرکزی قافلہ اسلام آباد روانہ ہوگا۔

دوسری جانب وفاقی دارلحکومت اسلام آباد میں امن وامان قائم رکھنے کے لیے پنجاب سے مزید پولیس فورس اور وسائل طلب کیے گئے ہیں۔ مجموعی طور پر پنجاب پولیس کے دو ہزار افسران و جوان اسلام آباد میں امن و امان قائم رکھنے کے لیے خدمات سرانجام دیں گے۔

  اسلام آباد میں 27 مارچ پریڈ گراؤنڈ شکر پڑیاں میں پی ٹی آئی کے جلسے، وزیر اعظم کے خلاف تحریک عدم اعتماد، حکومت اور اپوزیشن جلسوں اور لانگ مارچ کے لیے وفاقی دارالحکومت میں اضافی نفری طلب کرلی گئی ہے۔

ضلعی انتظامیہ اور پولیس کی جانب سے فول پروف سیکیورٹی و دیگر تمام انتظامات مکمل کر لیے گئے۔ سیکیورٹی انتظامات کو بہترین بنانے اور مانیٹرنگ کے نظام کو مؤثر کر نے کے لیے کنٹرول روم قائم کیا گیا ہے۔

کمشنر آفس راولپنڈی میں سیاسی جما عتوں کے جلسوں و مارچ کے پیش نظر امن و امان کے سلسلے میں خصوصی کنٹرول روم قائم کرلیا گیا۔

کنٹرول روم 24گھنٹے کام کرے گا اور یہاں متعلقہ محکموں کی جانب سے نامزد کردہ فوکل پرسنز بھی ڈیوٹی دیں گے۔ کنٹرول روم کے ذر یعے سیاسی جماعتوں کی ریلی روٹس کی مکمل نگرانی کی جائے گی۔

ڈویژن بھر میں تمام آفیسرز اور آفیشلز کی چھٹیاں منسو خ کر دی گئیں جبکہ افسران اور اسٹاف کو حاضری یقینی بنانے کی ہدایت کی گئی۔

ہسپتالوں میں قبل از وقت اقدامات کے تحت ایمرجنسی نافذ جبکہ سول ڈیفنس اور ریسکیو 1122 کو ہائی الرٹ کر دیا گیا۔ آفسران کی انٹری و ایگزٹ پوائنٹس پر ڈیوٹی مقرر کر دی گئی۔