لاہورایئرپورٹ پر کارگو طیارہ حادثے سے بال بال بچ گیا

cargo plane

 (ویب ڈیسک)لاہور ایئرپورٹ کے رن وے پر غیرملکی کارگو طیارہ خوش قسمتی سے حادثے میں بال بال بچ گیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ائیرپورٹ پر غیر ملکی کارگو طیارے کے اڑان بھرنے (ٹیک آف) کے دوران رن وے پر چاروں ٹائر پھٹے، جس پر کپتان نے حاضر دماغی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ہنگامی (ایمرجنسی) بریک لگا کر طیارے کو رن وے پر ہی روک لیا۔رپورٹ کے مطابق کارگو طیارہ علامہ اقبال ایئرپورٹ سے بحرین جارہا تھا، جو حادثے سے بال بال محفوظ رہا۔

 طیارے کے رکنے کے بعد کنٹرول ٹاور نے ائیرپورٹ رن بند ہونے پر دیگر پروازوں کو بھی روک لیا، جبکہ ٹائر پھٹتے ہی ریسکیو کی گاڑیاں ہنگامی اقدامات کیلئے رن وے پر پہنچی۔ایئرپورٹ انتظامیہ کے مطابق نجی کوریئر کمپنی کے کارگو جہاز 512کو حج ٹرمینل کے سامنے کھڑا کیا جارہا ہے۔

رن بند ہونے کی وجہ سے کراچی سے لاہور جانے والی نجی کمپنی کی پرواز 406 کو اسلام آباد ایئرپورٹ کی طرف موڑ دیا گیا ہے جبکہ پی آئی اے کی لاہور سے کراچی جانے والی پرواز 305 کی روانگی بھی روک دی گئی۔ ایئرپورٹ انتظامیہ کے مطابق رن وے بند ہونے سے مزید پروازوں کا شیڈول متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔

 پی آئی اے کی پرواز پی کے 9760 کو بھی لاہور ائیر پورٹ پر لینڈنگ سے روک دیا گیا، پی کے 9760 کو اسلام آباد اتار لیا گیا،اسی طرح پی ایف 145 کراچی سے لاہور جانے والی پرواز رن وے کی بندش کے باعث اسلام آباد اتار لی گئی۔

لاہور ایئرپورٹ کارن وے دو گھنٹے گزر جانے کے بعد تاحال کلیئرنہ ہوسکا، جس کی وجہ سے قطرایئرکی دوحہ سے آنے لاہور آنے والی پرواز 8808 کو لینڈنگ سے روک دیاگیا ہے، کنٹرولر کی جانب سے اجازت نہ ملنے پر پائلٹ طیارے کو پھول نگر کے اوپر گھماتا رہا جبکہ کراچی سے جانے والی پرواز 145 کو بھی لینڈنگ سے روک دیا گیا، جس کے بعد کپتان نے جہاز کا رخ اوکاڑہ کی طرف موڑ لیا۔