دھمکی دیں یا کچھ اور، نیب کام کرتارہے گا، جسٹس ریٹائر جاوید اقبال

دھمکی دیں یا کچھ اور، نیب کام کرتارہے گا، جسٹس ریٹائر جاوید اقبال

 ویب ڈیسک:  قومی احتساب بیورو (نیب) کے چیئرمین جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے کہا ہے کہ نیب پر تنقید حقائق کو دیکھ کر کریں۔ اگر نیب نے زیادتی کی ہے تو عدلیہ کے پاس جائیں وہ آزاد ہیں۔

لاہور میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین نیب نے  دھمکی یا کچھ بھی ہو نیب نے اپنا کام کرنا ہے اور کرتا رہے گا۔ تعمیری تنقید کریں گے تونیب کو بھی فائدہ ہوگا۔ اتنے الزامات لگ رہے ہیں کہ جواب دینے کا وقت نہیں ملتا۔ یہ بھی الزام لگایا گیا کہ کورونا نیب نے پھیلایا۔

 جاوید اقبال نے کہا کہ یہ نہیں ہوسکتا کہ آپ زیادتی کریں اور نیب ایکشن نہ لے۔ ہم اپنے قول و فعل کے لیے اللہ کے سامنے جوابدہ ہیں۔ کرپشن کے خاتمے کی کوشش پرالزامات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

چیئرمین نیب نے کہا کہ اگر ہمیں فیصلے کرنے کا اختیار ہوتا تو سارے کیس نمٹا دیتے۔ فیصلوں کا اختیار نیب کے پاس نہیں ہے۔ پلی بارگین قانون کے مطابق ہوتی ہے۔انہوں نے کہا کہ نیب سیاستدانوں کی عزت کرتا ہے اور کرتا رہے گا۔ نیب میں وہ تبدیلی کریں جس سے کرپشن کا خاتمہ ہو۔ ہم تو ہمیشہ قانون کے مطابق عمل کریں گے۔