زیاتی کےبعد معصوم چھریوں کے وارسے قتل

زیاتی کےبعد معصوم چھریوں کے وارسے قتل

(عابد چوہدری ) گرین ٹاون میں سات سالہ بچے کو بدفعلی کےبعد چھریوں کے وار کر کے قتل کر دیا گیا، وزیراعلیٰ عثمان بزدار اور آئی جی پنجاب نے واقعہ کا نوٹس لیکر سی سی پی او سے رپورٹ طلب کر لی۔                         

تفصیلات کے مطابق گرین ٹاون کے علاقے باگڑیاں میں سات سالہ بچے احسان کو محلے داروں فراز اور اللہ دتہ نے خالی مکان میں بدفعلی کا نشانہ بنایا۔ملزموں نے شناخت چھپانے کے لئے بچے کو چھریوں کے وار کر کےقتل کردیا۔بعد ازاں ملزم فراز سات سالہ بچے احسان کی لاش لیکر اسکے گھر پہنچا اور واقعہ کو ٹریفک حادثہ قرار دینے کی کوشش کی۔اسی دوران علاقہ مکینوں نے پولیس کو اطلاع کردی۔ پولیس نے موقع پر پہنچ کر ملزم فراز کو گرفتار کر لیا، جبکہ دوسرا ملزم اللہ دتہ موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا۔ پولیس نے مقتول بچے کی لاش ضروری کارروائی کے بعد پوسٹ مارٹم کے لئے مردہ خانے منتقل کر دی۔

مقتول احسان کے والد عدنان کا کہنا ہے کہ انکے چار بچے ہیں، ملزمان نے بےدردی کے ساتھ انکے بچے کو قتل کیا، انہیں انصاف فراہم کیا جائے۔ایس پی انویسٹی گیشن صدر عیسیٰ خان کا جائے وقوعہ کا دورہ کرتے ہوئے کہنا تھا ، موقع سے شواہد اکٹھے کر کے دوسرے ملزم کی گرفتاری کے لئے ٹیمیں تشکیل دے دیں ہیں،پوسٹ مارٹم رپورٹ میں حقائق واضح ہو جائیں گے۔وزیراعلیٰ سردار عثمان بزدار اور آئی جی پنجاب نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے سی سی پی او لاہور سے رپورٹ طلب کرلی ہے۔