ماڈل نایاب کا قاتل یا کوئی اور؟ پولیس کے ہاتھ اہم سراغ لگ گیا

پنجاب پولیس
ماڈل نایاب

(مانیٹرنگ ڈیسک) ماڈل نایاب کے قتل کیس کی تحقیقات میں پولیس کے ہاتھ اہم سراغ لگ گیا، ماڈل کے مبینہ قاتل کی سی سی ٹی وی منظر عام پر آگئی۔

تفصیلات کے مطابق پولیس نے مقتولہ ماڈل نایاب کے گھر کے قریب سے مشکوک شخص کی  سی سی ٹی وی فوٹیج  حاصل کرلی ہے ، مشتبہ شخص کی عمر 30 سے 35 برس بتائی جارہی ہے ،مشکوک شخص کو صبح پانچ بج کر 26 منٹ پرگھر کے قریب دیکھا گیاہے ، پولیس نے مشکوک شخص کی ویڈیو ماڈل نایاب کے ہمسایوں سے حاصل کی ہے ۔

پولیس کا کہنا ہےکہ فوٹیج میں نظرآنے والامشکوک شخص نایاب کا قاتل ہوسکتا ہے،  فوٹیج کے ذریعے مشتبہ شخص کو ٹریس کرنے کی کوششیں جاری ہیں۔ فوٹیج کو فرانزک لیب بھجوا کر مشکوک شخص کا چہرہ صاف کر کے تصاویر حاصل کی جائے گی۔

ڈیفنس میں قتل ہونیوالی ماڈل گرل نایاب کی تفتیش میں ایک اور اہم پیشرفت سامنے آئی ہے ،پولیس نے نایاب سےرابطےمیں رہنےوالے10افرادکوشامل تفتیش کرلیا۔شامل تفتیش کیےگئےافرادکےبیانات قلمبندکیے گئے، شامل تفتیش افراد سےمقتولہ نایاب سےانکی آخری ملاقات اورفارم ہاؤس میں ہونیوالی لڑائی سےمتعلق پوچھ گچھ  کی گئی جبکہ مقتولہ نایاب کی ذاتی زندگی اوررہن سہن سےمتعلق بھی سوالات کیے گئے۔

  پولیس کا کہنا ہے کہ شامل تفتیش کیے گئےافرادکاتعین نایاب کے موبائل ڈیٹاسےکیاگیا،نایاب کے گھر کی عقبی کھڑکی کی جالی ٹوتی ہوئی ملی،کھڑکی کے قریب لگےانسانی ہاتھوں کےنمونےفرانزک کیلئےبھجوادیئےہیں۔