وزیراعلیٰ پنجاب کا وکلاء کے لئے 10کروڑ روپے کی امداد

وزیراعلیٰ پنجاب کا وکلاء کے لئے 10کروڑ روپے کی امداد

علی اکبر: وزیر اعلی پنجاب نے کہا ہے کہ بار ایسوسی ایشن کے ذریعے صوبہ بھر میں مالی دشواریوں کا سامنا کرنے والے وکلاء کو مالی امداد دی جائے گی, وکلاء برادری کے مسائل کا بخوبی ادراک ہے،حکومت ممکنہ وسائل فراہم کرے گی .

وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارنے لاہور ہائی کورٹ بارکے عہدے داروں اور وکلاء کے وفد کو صوبہ بھر میں کورونا کی وجہ سے پیدا ہونے والی صورتحال کے باعث مالی دشواریوں کا سامنا کرنے والے وکلاء کے لئے 10کروڑ روپے امدادی رقم کا چیک دیا ہے.

وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ بار ایسوسی ایشن کے ذریعے صوبہ بھر میں مالی دشواریوں کا سامنا کرنے والے وکلاء کو مالی امداد دی جائے گی. وکلاء برادری کے مسائل کا بخوبی ادراک ہے،حکومت ممکنہ وسائل فراہم کرے گی .صوبہ بھر کے وکلاء کے لئے دیگر سہولتیں بھی فراہم کرنے کا عزم رکھتے ہیں .

وزیراعلیٰ نے بتایا کہ دور دراز شہروں سے آنے والے وکلاء کی سہولت کیلئے لاہور میں سٹیٹ آف دی آرٹ قیام گاہ بنائی جائے گی،انہو ں نے ہدایت کی کہ وکلاء ٹاور کے لئے موزوں جگہ کا انتخاب کر کے جلد کارروائی شروع کی جائے. لاہور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن نے وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی کاوشوں کو بھرپور خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہاکہ کڑے وقت میں وکلاء برادری کی مدد کا جذبہ خوش آئند ہے.وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے ہمیشہ وکلاء کے مسائل کے حل کو مقدم جانا ہے.

ملاقات میں صوبائی وزیرقانون راجہ بشارت، ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل شان گل، صدرلاہور ہائی کورٹ بارایسوسی ایشن طاہر نصر اللہ وڑائچ اور نائب صدر پنجاب بار کونسل لالہ محمد اکرم خاکسار، ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل مہر فیاض،عمیر خان نیازی،اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل انیس ہاشمی بھی موجود تھے.

دوسری جانب پنجاب بار کونسل نے بھی وکلا کیلئے امدادی پیکج کی رقم تین کروڑ سے بڑھا کر چھ کروڑ کردی، ہرمستحق وکیل کو دس ہزار روپے ملیں گے۔