حنیف عباسی کے خلاف فیصلہ پر سوال ضرور اُٹھیں گے: خواجہ سعد رفیق

حنیف عباسی کے خلاف فیصلہ پر سوال ضرور اُٹھیں گے: خواجہ سعد رفیق


قذافی بٹ :متحدہ مجلس عمل کو الیکشن میں ایک اور دھچکا، مرکزی جمعیت اہلحدیث کے بعد جے یو پی نے بھی ن لیگی امیدوار کی حمایت کا اعلان کر دیا۔ جمعیت علمائے پاکستان این اے 131 میں مسلم لیگ ن کے امیدوار خواجہ سعد رفیق کی حمایت کرے گی۔

یہ بھی لازمی پڑھیں:نیوز بلیٹن 3بجے 14 نومبر2018  

ایم ایم اے کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات اور جے یو پی کے سیکرٹری جنرل مولانا اویس نورانی نے خواجہ سعد رفیق سے ملاقات کی اور انہیں حلقے میں اپنی حمایت کا یقین دلایا۔ این اے 131 میں لیگی امیدوار خواجہ سعد رفیق کا کہنا تھا کہ جب حنیف عباسی کے خلاف رات کے گیارہ بجے فیصلہ آئیں گے تو سوال ضرور اٹھیں گے۔ بتایا جائے کہ فیصلہ میں اتنی تاخیر کی کیا ضرورت تھی، ایسا فیصلہ بھٹو اور نوازشریف کے خلاف بھی آیا، ایسے اقدامات معاشرے کو تقسیم کرکے تلخیوں کو ابھاریں گے ۔

اس خبر کو ضرور پڑھیں:پی ٹی آئی کارکنان نے اپنی ہی جماعت کو دھوکہ دے دیا

جے یو پی کے سیکرٹری جنرل مولانا اویس نورانی نے سعد رفیق کی انتخابی مہم کی بھرپور حمایت کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ کچھ لوگوں نے غیر مہذب معاشرہ تشکیل دیا۔ لعن طعن کا بویا گیا بیج نقصان دہ ہے۔ عمران خان نے انقلاب کے نام پر لوگوں میں بے حیائی کا فروغ کیا کسی کی عزت نفس مجروح کے علاوہ کوئی کام نہیں کیا۔ دونوں رہنمائوں میں اتفاق پایا گیا کہ جماعتوں کے درمیان تعاون انتخابات کے بعد بھی جاری رہے گا۔