سانحہ سیالکوٹ، تحقیقات میں تہلکہ خیزانکشافات سامنے آگئے

Priyantha Kumara lynching incident at sailkot
Priyantha Kumara

ویب ڈیسک: سری لنکن شہری پرانتھا کمارا کے قتل کی تحقیقات میں مزید انکشافات ہوئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق بائیو میٹرک مشین کے ریکارڈ کے مطابق واقعہ کےروز دو ہزار ورکر زفیکٹری میں موجود تھے، جھگڑا شروع ہوتے ہی پرانتھا کے اسسٹنٹ وحید نے معاملہ رفع دفع کرانے کی کوشش کی ،پولیس رپورٹ کے مطابق وحید پرانتھا کو حالات خراب ہونے پر تیسری منزل پر لے گیا تاکہ اسے بچایا جا سکے مگر بدقسمتی سے چھت کے دروازے کی کنڈی ٹوٹی ہوئی تھی۔

یاد رہے کہ چند روز قبل سیالکوٹ میں قائم لیدر فیکٹری میں کام کرنے والے غیر ملکی مینیجر کو ملازمین نے توہین مذہب کا الزام لگا کر بہیمانہ تشدد کا نشانہ بناکر قتل کردیا تھا جبکہ مقتول کی لاش کو چوک پر لاکر نذر آتش کردیا تھا۔

وقوعہ کے وقت لیدر فیکٹری میں رنگ روغن کا کام جاری تھا، سری لنکن منیجر نے صبح 10 بج کر28 منٹ پردیوارپر لگے کچھ پوسٹرز اتارے تو اس دوران فیکٹری منیجر اور ملازمین میں معمولی تنازع ہوا۔ فیکٹری منیجر نے غلط فہمی کا اظہار کرکے معذرت بھی کی لیکن کچھ ملازمین نے بعد میں دیگر افراد کو اشتعال دلایا جس پر بعض ملازمین نے منیجر کو مارنے کے بعد آگ لگادی۔