پی ایم اے کا حکومت سے ماسک کا استعمال لازمی قرار دینے کا مطالبہ

 پی ایم اے کا حکومت سے ماسک کا استعمال لازمی قرار دینے کا مطالبہ

زاہد چوہدری:   کورونا وائرس کی شدت میں اضافہ، پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن نے حکومت سے ماسک کا استعمال لازمی قرار دینے کا مطالبہ کر دیا۔

 

تفصیلات کے مطابق پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کے صدر ڈاکٹر اشرف نظامی کی سربراہی میں اجلاس منعقد ہوا، اجلاس میں  پی ایم اے عہدیداران شریک ہوئے، کورونا کیسز میں حالیہ اضافے پر گہری تشویش کا اظہار کہا گیا۔

 پی ایم اے کی جانب سے کورونا کیسز میں حالیہ اضافے پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ حکومت اور عوام کی جانب سے کورونا سے بچاؤ کے ایس او پیز پر عملدرآمد نہ ہونے کی وجہ سے دوبارہ کیسز بڑھ رہے ہیں اور اموات ہورہی ہیں جو سنگین خطرہ بن سکتا ہے۔

 پی ایم اے نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ ماسک کے استعمال کو گھر سے باہر قدم رکھنے والے ہر شہری کے لئے لازمی قرار دینے کا قانون نافذ کیا جائے تاکہ کورونا کے پھیلاو کو روکا جاسکے۔

واضح رہے کہ  شہرمیں کورونا کی شدت میں پھر اضافہ ہو رہا ہے، چوبیس گھنٹوں کے دوران پنجاب بھر میں 176 نئے مریض سامنے آئے ہیں، صوبے بھر میں چوبیس گھنٹوں میں مجموعی طور پر 9 اموات ہوئیں جن میں سے 8 لاہورسے رپورٹ ہوئی ہیں۔ کورونا وبا کے دوران پنجاب بھر میں اب تک 1 لاکھ1 ہزار936 کنفرم مریض رپورٹ ہوچکے ہیںم جن میں سے نصف سے زائد  51ہزار180 لاہورمیں رپورٹ ہوئے، صوبے میں وبا سے مجموعی طور پر 2 ہزار319 اموات ہوچکی ہیں جن میں سے 904 لاہورمیں ہوئیں، پنجاب میں کورونا سے سب سے زیادہ متاثرہ شہر لاہور ہے۔

طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس انسانوں سے انسانوں میں منتقل ہوتا ہے، کورونا وائرس کی علامات میں سانس لینے میں دشواری، بخار، کھانسی اور نظام تنفس سے جڑی دیگر بیماریاں شامل ہیں، شہری کورونا وائرس سے بچنے کیلئے ایک دوسرے سے ہاتھ ملانے اور گلے ملنے سے اجتناب کریں، گرم پانی پیئں اور ماسک استعمال کریں۔