سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے انتخابات میں صرف 3روز باقی 

سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے انتخابات میں صرف 3روز باقی 

ملک اشرف: سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے سالانہ انتخابات میں صرف 3روز روز باقی رہ گئے، امیدواروں کی انتخابی سرگرمیاں عروج پر پہنچ گئیں، سپریم کورٹ بار الیکشن  کے لئے  تین اہم عہدوں  کے لئے 7 امیداروں کے درمیان مقابلہ ہوگا اور سب سے بڑا انتخابی دنگل لاہور میں سجے گا۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے سالانہ انتخابات 29 اکتوبر کوہوں گے، جس میں لاہور سمیت ملک بھر سے 3 ہزار 177 ووٹرز ووکلاء اپنا حق رائے دہی استعمال کریں گے، سپریم کورٹ بار کے وکلاء کی سب سے زیادہ تعداد 1 ہزار329  کا تعلق لاہور سے ہے جو لاہور رجسٹری میں ووٹ کاسٹ کریں گے۔

صدر کےعہدے  کے لئے دو امیدواروں عبدالطیف آفریدی اور عبدالستار خان کے درمیان ون ٹو ون مقابلہ ہوگا، اس مرتبہ دونوں صدارتی امیدواروں کا تعلق خیبر پختونخوا سے ہے، نائب صدر  کے لئے  پنجاب سے تین امیدواروں میں مقابلہ ہوگا، نائب صدر  کے لئے بابر علی خلجی، محمد ارشد باجوہ چودھری اور محمد یونس خان نول میدان میں ہیں۔

 

سیکرٹری کے عہدے  کے لئے پنجاب سے احمد شہزاد فاروق رانا اور محمد عامر سہیل سلیمی کے درمیان مقابلہ ہوگا، پنجاب سے ممبر ایگزیکٹو  کے لئے چار امیدواروں کے نام شامل ہیں، سپریم کورٹ بار کی الیکشن مہم میں امیدوار وں کے بینرز، فلیکسز، اشتہارات کے استعمال، وکلاء کے اجتماعات اور کھانوں اور تکلف و تقریبات پر مکمل پابندی عائد ہے۔

 

لاہور رجسٹری ،ملتان، بہاولپور ، کراچی، پشاور ، کوئٹہ سمیت دیگر بڑے شہروں میں ہولنگ سٹیشن قائم ہوں گے،   سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے سالانہ انتخابات 29 اکتوبر کو صبح ساڑھے آٹھ بجے سے شام 5 بجے تک ہونگے،  پولنگ میں دوپہر ایک سے دو بجے نماز اور کھانے کا وقفہ ہو گا،  انتخابات کے غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کا اعلان 29اکتوبر کو ہی کردیا جائے گا، الیکشن کے نتائج کا سرکاری اعلان 4 نومبر کو کیا جائے گا۔