رانگ پارکنگ پر اب کتنا جرمانہ ہوگا ؟عدالت کا بڑا حکم آگیا

رانگ پارکنگ پر اب کتنا جرمانہ ہوگا ؟عدالت کا بڑا حکم آگیا
سورس: Google
Stay tuned with 24 News HD Android App
Get it on Google Play

(ملک اشرف)لاہور ہائیکورٹ میں سموگ کء تدارک کے متعلق کیس کی سماعت ہوئی ۔ عدالت نے  دھواں دینے والے بھٹوں کی بندش  کے لئےسزائیں بڑھانے کے لئے محکمہ ماحولیات کو رولز میں ترمیم کی ہدایت کردی۔

جسٹس شاہد کریم نے ریمارکس دیتے ہوئے کیا کہ آلودگی کی بڑی وجہ شہر میں ٹریفک کی گھبیر صورت حال  ہے، میں نے ساری عمر یہاں نہیں رہنا ، اہنے بچوں اور ملک کے لئے اقدمات کررہے ہیں۔ عدالت نے  سکولز، کالجز پنجاب یونیورسٹی ، دیگر سرکاری اداروں کی دھواں دینے والی بسوں کے خلاف کاروائی کا حکم دیا۔

  عدالت نے ٹیپا کو مال روڈ ، جیل روڈ سمیت دیگر علاقوں میں نو پارکننگ کے بورڈز لگانے کا حکم دیا۔نو پارکنگ کی جگہ کھڑی والی گاڑیوں کو دوہزار جرمانہ کیا جائے گا۔ عدالت نے ٹریفک وارڈنز کو صبح ، دوہہر اور شام کے اوقات میں ٹریفک ہیٹرولنگ کو  یقینی بنانے کی ہدایت کردی۔

عدالت نے  پی ایچ اے کو شہر میں  اربن فاریسٹ لگانے کا  بھی حکم  دیا۔جسٹس شاہد کریم نے ریمارکس دیےاگر پی ایچ اے کو انٹی کرہشن کا خوف ہے تو عدالت سے منظوری لے لے اورکیس کی سماعت کی جس میں جوڈیشل واٹر اینڈ انوائرمینٹل کمیشن  حناء حفیظ اللہ کی جانب سے عدالتی احکامات پر عمل درآمد رپورٹ ہیش کی  گئی,عدالتی احکامات پر عمل درآمد کے سلسلے میں وزیر زراعت سے ملاقات ہوئی . جسٹس شاہد کریم نے ریمارکس دئیے کہ سابقہ ہفتے سموگ کے حوالے سے بہتری آئی ہے۔

شام کے اوقات میں ٹریفک کا دباو زیادہ ہوتا ہے، جیل روڈ ، مال روڈ ، کینال روڈ سمیت دیگر علاقے شامل ہیں۔ ٹریفک جام ہو تو آلودگی کی شرح میں اضافہ ہوجاتا ہے جبکہ جیل روڈ کے بائیں طرف سروس روڈ پر رانگ پارکنگ کی وجہ سے ٹریفک جام رہتی ہے۔پہلے یہاں لفٹر نظر اتے تھے ، اب عدالت کے جرمانے کے حکم کے بعد لفٹر نظر نہیں آریے

 ممبر جوڈیشل کمیشن کی استدعا کی کہ عدالت لفٹر چارجز کا حکم دے دے ۔چارجز اور معاملہ ہے، کیوں نہ رانگ پارکنگ والوں کو 5 ہزار روہیہ جرمانہ کرنے کا حکم دے دیں ۔شہر میں نو پارکنگ کے بورڈ لگنے چائیے اس کے لئے ٹیپا کو حکم دے دیتے ہیں۔ رانگ پارکنگ کھڑی ہونے والی گاڑی کو فوری جرمانہ ہونا چائیے۔پی ایچ اے کے ڈائریکٹر نے شہر میں درخت لگانے کے حوالے سے رپورٹ بھی پیش کی۔

اس کے علاوہ عدالت نے   رانگ پارکنگ کھڑی گاڑیوں کو 5 ہزار روہے جرمانہ کرنے کا حکم دینے بھی  کا عندیہ دیا ہے۔مال روڈ ، جیل روڈ ، کینال روڈ سمیت دیگر سڑکوں پر رانگ پارکگ کھڑی گاڑیوں کے خلاف کاروائی کا حکم دیا۔جبکہ مال روڈ ، جیل روڈ ، فیروز پور روڈ پررانگ پارکنگ کھڑی گاڑیوں کو کلمپ لگانے کے طریقہ کار بنابے کا حکم دیا۔