قتل کی لرزہ خیز واردات،شادی شدہ لڑکی کو موت کے گھاٹ اتاردیا

قتل کی لرزہ خیز واردات،شادی شدہ لڑکی کو موت کے گھاٹ اتاردیا

(فہد بھٹی) نشتر کالونی کے علاقے میں 21 سالہ ارم نامی لڑکی کا قتل ہوگیا، پولیس نے مقتولہ کے والد کی مدعیت میں مقدمہ درج کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق نشتر کالونی میں 21 سالہ ارم نامی لڑکی کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا، لرزہ خیز قتل کی اطلاع ملتے ہی پولیس جائے وقوعہ پر پہنچی اور موقع سے شواہد اکٹھے کیے، مقتولہ ارم کی دو سال قبل ذیشان نامی شخص کے ساتھ شادی ہوئی تھی ۔ گزشتہ روز ارم اپنے گھر میں مردہ حالت میں پائی گئی ۔

ذرائع ابلاغ کے مطابق مقتولہ ارم کو چھریوں اور ڈنڈوں کے وار کر کے قتل کیا گیا ۔ پولیس نے لاش کو نامعلوم ملزم کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کر لیا جبکہ قتل کی واردات کے دن سے مقتولہ کا خاوند بھی غائب ہے، پولیس نے قتل کا سراغ لگانے کے لئےمختلف پہلوؤں سےتحقیقات کا آغاز کردیا،لاش کو پوسٹمارٹم کے لیے مردہ خانے منتقل کر کے کارروائی شروع کردی گئی ہے ۔ 

گزشتہ روز مغلپورہ میں بچوں کی لڑائی کے دوران سر میں ڈنڈالگنے کے نتیجے میں واپڈا ملازم قتل ہوگیا تھا ، پولیس نے 3بھائیوں اور خاتون سمیت 4افرادپر مقدمہ درج کر کے لاش پورسٹمارٹم کے لیے منتقل کر دی ۔ ڈرائی پورٹ پر بچوں میں کسی بات پر جھگڑا ہو گیا اس دوران 56سالہ ارشد بیچ بچاؤ کرانے کے لیے آگے بڑھا تو عرفان وغیرہ نے اس کے سر میں ڈنڈا دے مارا جس کے نتیجے میں ارشد بے ہوش ہو گیا جسے فوری طبی امداد کے لیے ہسپتال لے جایا گیا جہاں وہ جانبر نہ ہو سکا۔

اطلاع ملنے پر پولیس نے موقع پر پہنچ کر لاش قبضے میں لے کر ایدھی ایمبولینس کے ذریعے پورسٹمارٹم کے لیے منتقل کر کے مقتول کے بھائی کی درخواست پر خاتون سمیت 3بھائیوں عرفان ، عدنان اور ذیشان پر مقدمہ درج کرکے تفتیش کا آغاز کر دیا۔