کورونا کا ڈیلٹا ویرئنٹ تیزی سے پھیلنے لگا ، صورت حال تشویشناک، ڈھائی ہزار سے زائد نئے کیسز رپورٹ

کورونا کا ڈیلٹا ویرئنٹ تیزی سے پھیلنے لگا ، صورت حال تشویشناک، ڈھائی ہزار سے زائد نئے کیسز رپورٹ

 ویب ڈیسک : ملک میں کورونا سے صورتحال تشویشناک، فعال کیسز کی تعداد 51ہزار سے تجاوز کر گئی ڈھائی ہزار سے زائد نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں

 سرکاری ویب سائٹ کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں ملک میں مزید 2ہزار 579 افراد میں وائرس کی تصدیق ہوئی جبکہ 40افراد ہلاک ہوگئے۔اس دوران ملک بھر میں 41ہزار 186 ٹیسٹ کیے گئے جس میں مثبت کیسز کی شرح 6 فیصد سے زائد رہی۔21جولائی کی شام تک 9لاکھ 96ہزار 451 افراد میں وائرس کی تصدیق ہو چکی ہے جن میں سے 9 لاکھ 22ہزار سے زائد صحتیاب ہو چکے ہیں۔کورونا وائرس سے اب تک مجموعی طور پر 22 ہزار 888 افراد موت کے منہ میں جا چکے ہیں جبکہ اس وقت ملک میں فعال کیسز کی تعداد 51 ہزار 529 ہو گئی ہے۔

پنجاب اور سندھ دونوں ہی صوبوں میں ساڑھے تین لاکھ سے زائد افراد میں وائرس کی تصدیق ہو چکی ہے جبکہ پنجاب میں 10 ہزار 900 اور سندھ میں 5ہزار 759 افراد ہلاک ہو چکے ہیں، خیبر پختونخوا میں بھی 4ہزار 397 افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں۔تاہم حالیہ عرصے کے دوران صوبہ سندھ میں کیسز کی تعداد میں بے انتہا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے اور اس وقت صرف صوبہ سندھ میں فعال کیسز کی تعداد 32 ہزار 637 ہے جبکہ ملک کے سب سے بڑے صوبے پنجاب میں 10 ہزار 441 فعال کیسز ہیں۔صوبہ سندھ خصوصاً ملک کے سب سے بڑے شہر کراچی میں اس تشویشناک صورتحال کی وجہ وائرس کی قسم ڈیلٹا ہے جس سے کیسز میں بہت تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے جس کی وجہ سے ماہرین صورتحال کو تشویشناک قرار دے چکے ہیں۔رپورٹ کے مطابق ملک کو ایسی ہی صورتحال کا سامنا کورونا وائرس کی پچھلی لہر سے چند ہفتے قبل یا اس کے عروج پر کرنا پڑا تھا، پچھلے پہلی لہر کے دوران 2جون کو 49ہزار 965 فعال کیسز تھے اور یکم جولائی تک یہ تعداد ایک لاکھ 8ہزار 642 تک پہنچ گئی تھی۔بڑھتے ہوئے کیسز کی وجہ بھارت سے نمودار ہونے والی وائرس کی قسم ڈیلٹا اور عیدالاضحیٰ پر شاپنگ کے دوران ایس او پیز کی خلاف ورزی کو قرار دیا جا رہا ہے۔گزشتہ روز پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹر قیصر سجاد نے خبردار کیا تھا کہ سرکاری ہسپتال مکمل بھر چکے ہیں اور مریضوں کی گنجائش نہیں ہے۔اور یہاں تک کہ کچھ نجی ہسپتال مریضوں کے داخلے سے انکار کر رہے ہیں۔