موبائل انٹرنیٹ سروس معطل کرنے کا فیصلہ

 موبائل انٹرنیٹ سروس معطل کرنے کا فیصلہ

سٹی 42:سٹوڈنٹس کو نقل سے دور رکھنے کیلئے تمام تدبیریں کی جاتی ہیں، امتحانات کے ارد گرد سکیورٹی تعینات کی جاتی ہے،غیر متعلقہ افراد کے امتحانی حدود میں آنے پر پابندی عائد کی جاتی ہے،اگر کو ئی نقل کرتا پکڑا جائے تو سیدھا جیل بیھجا جاتا ہے، انٹرنیٹ کےدور میں نقل کرنا آسان ہوگیا ہے۔اب سے چھٹکارے کا واحد حل اس پر پابند ی ہے جو ملک بھر میں لگا ئی جائے گی ۔

ستمبر کے مہینے میں تقریباً 5 لاکھ کے قریب ہائی اسکول گریجویٹس یونیورسٹی میں داخلے کے لیے امتحان دیں گے اور اس دوران بڑے پیمانے پر نقل کی روک تھام کے لیے حکام نے موبائل انٹرنیٹ سروس معطل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ملک میں یونیورسٹی میں داخلے کے لیے ہونے والے امتحانات کے دوران بڑے پیمانے پر نقل کی روک تھام کے لیے صبح 8 بجے سے 11 بجے تک موبائل انٹرنیٹ سروس بند کی جانے لگی ہے۔

حکام کی جانب سے 24 ستمبر تک روزانہ صبح 8 سے 11 بجے تک موبائل انٹرنیٹ سروس معطل کرنے کی وجہ سے تقریباً 13 ملین صارفین موبائل میں انٹرنیٹ استعمال کرنے سے قاصر ہیں۔

یاد رہے امتحانات کے دوران نقل کی روک تھام کے لیے دنیا بھر میں بے شمار سخت اقدامات کیے جاتے ہیں لیکن حال ہی میں افریقی ملک سوڈان میں نقل کی روک تھام کے لیے ایک انوکھا اقدام ہی دیکھنے میں آیا ہے۔ سوڈان کی حکومت کی جانب سے یہ پابندی صرف موبائل انٹرنیٹ سروس پر لگائی گئی ہے تاہم بینک اور دیگر کمپنیاں اپنا کام کیبل انٹرنیٹ سروس کے تحت کر رہی ہیں۔