پنجاب کے سرکاری اداروں کا احتساب شروع، کرپٹ افسران کا بچنا اب ناممکن

پنجاب کے سرکاری اداروں کا احتساب شروع، کرپٹ افسران کا بچنا اب ناممکن
City42 - Punjab Govt

(علی رامے) وزیر اعظم پاکستان کے حکم پر اداروں کا احتساب شروع، پنجاب میں 66 ارب روپے کے میگا پروگرام کی رقم کہاں اڑائی؟ وفاق نے پنجاب کی ضلعی حکومتوں سے جواب طلب کرلیا۔ 3 ارب روپے کے فںڈز کیسے ضائع کیے ضلعی حکومتیں رپورٹ دیں ۔

ابتدائی طورپرپنجاب میں وزیر اعظم ایس ڈی جی پروگرام کے تحت پنجاب میں66 ارب روپے کے میگا پروگرام کی رقم کے اخراجات پرپنجاب حکومت اور ضلعی حکومتوں سے رپورٹ طلب کرلی گئی ہے۔وفاقی کیبنٹ ڈویثرن نے پنجاب حکومت کو خط لکھا ہے کہ ایس ڈی جی پروگرام کے تحت فنڈز کہاں خرچ اور ضائع کیےان سب کی رپورٹ وفاقی کیبنٹ ڈویثرن کو جلد از جلد ارسال کی جائے۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم ’’ایس ڈی جی‘‘ پروگرام کے تحت پنجاب حکومت کو 2016 سے 2018 تک 66 ارب روپے کی رقم جاری کی گئی تھی، جسے پینےکے صاف پانی، تعلیم، صحت، سوشل سیکٹرز اور روڈ سیکٹرز پر خرچ کرناتھا۔حکام کا کہنا ہے کہ پنجاب کی ضلعی حکومتوں نے 66 ارب روپے میں سے 63 ارب 18 کروڑ روپے استعمال کیے ہیں جبکہ 3 ارب 39 کروڑ روپے کے فنڈز ضائع کیے ہیں۔

 دوسری جانب  صوبائی محکمہ پی اینڈ ڈی نے کمشنرز کو فنڈز کے استعمال پر تفیصلات مرتب کرکے رپورٹ پیش کرنے اور وزیر اعظم سسٹین ایبل ڈویلپمنٹ گول منصوبے پر اخرجات کی تفصیل پیش کرنے کا کہہ دیا۔