نیب کا شہباز شریف کے اثاثے منجمد کرنے کا فیصلہ

نیب کا شہباز شریف کے اثاثے منجمد کرنے کا فیصلہ

(سعود بٹ) نیب نے شہباز شریف کی لاہور میں واقع 96 ایچ ماڈل ٹاﺅن ، مری ڈونگا گلی میں بنگلہ اور خیبرپختونخوا میں واقع رہائشگاہ سمیت دیگر اثاثہ جات کو عارضی طور پر قبضے میں لینے کا فیصلہ کرلیا۔

ذرائع کے مطابق شہباز شریف کو تحفہ میں کروڑوں مالیت کی دو قیمتی لینڈ کروزر سمیت 3 لگژری گاڑیاں نامعلوم افراد کی جانب سے تحفہ میں دی گئیں، جن کی تفصیلات شہباز شریف فراہم کرنے میں ناکام رہے ہیں۔

  نیب ذرائع کی جانب سے بتایا گیا کہ ریونیو اور ایکسائز حکام کو شہباز شریف کی جائیداد اور گاڑیوں کی فروخت پرعارضی پابندی عائد کرنے کے حوالہ سے آگاہ کردیا گیا ہے،  تمام متعلقہ اداروں کو خط لکھنے کے بعد احتساب عدالت سے باقاعدہ طور پر قبضہ کرنے کی اجازت لی جائے گی، جس کے بعد جائیدادوں پر قبضہ کرلیا جائے گا۔

 علاوہ ازیں ایف بی آر نے سال 2013ءکے انکم سپورٹ لیوی ٹیکس کی مد میں مریم نواز پر12لاکھ 57 ہزار اور نصرت شہباز پر ایک لاکھ 72ہزار روپے ٹیکس عائد کرکے نوٹس جاری کردئیے، دونوں کو ٹیکس ادائیگی کے لئے 23 جولائی تک کی مہلت دے دی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مریم نواز اور نصرت شہباز نے مقررہ وقت پر ٹیکس ادا نہ کیا تو اکاونٹس منجمد کر کے ریکوری کر لی جائے گی۔

Sughra Afzal

Content Writer