اداکارہ و ماڈل سائرہ یوسف کی شہریارمنور کیساتھ بولڈ تصاویر وائرل

اداکارہ و ماڈل سائرہ یوسف کی شہریارمنور کیساتھ بولڈ تصاویر وائرل

(سٹی42) 2011ء میں بننے والا ڈرامہ سیریل 'میرا نصیب' سے شہرت حاصل کرنے والی اداکارہ سائرہ یوسف کی نئی تصاویر سامنےآئیں، سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کی گئیں ان تصاویر پر صارفین نے ناپسندیدگی کا اظہار کیا،قابل اعتراض ان فوٹوز پر کمنٹس تبصروں کا سلسلہ جاری ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان شوبز انڈسٹری کی اداکارہ وماڈل سائرہ یوسف  کی بولڈ تصاویر کو دیکھ سوشل میڈیا صارفین پھٹ پڑے، سائرہ یوسف نے تصاویر ساتھی اداکار شہریار منور کے ساتھ بنوائیں،جیسے ہی صارفین نے تصویریں دیکھیں تو شدید طنز کیاگیا، فوٹوشوٹ میں سائرہ یوسف کے لباس اور بولڈسٹائل پر سوشل میڈیا پر شدید تنقید کی جارہی ہے۔

اداکارہ کے مداحوں اور سوشل میڈیا صارفین نے اپنے خیالات  کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سائرہ کی ان تصاویر نے مایوس کیا،حال ہی میں اداکار شہروز سبزواری کے ساتھ طلاق ہوئی تو لوگوں کی ہمدردیاں ان کے ساتھ تھیں مگر قابل اعتراض تصاویر سامنے آنے پر صارفین غصے پر قابو نہ رکھ سکے اور ملے جلے خیالات کا اظہار کررہے ہیں۔لوگوں نے کا کہناتھا کہ ’ سائرہ یوسف آپ سے اس کی امید نہیں تھی۔‘

مہوش نامی صارف کا کہناتھا کہ سائرہ آپ کو شرم آنی چاہیئے آپ ایک ماں بھی ہیں۔ کچھ پہننے اور کرنے سے پہلے بیٹی کا بھی سوچو۔ ایک لڑکی نہیں ہو آپ اب۔ کیسی حرکتیں کررہی ہو طلاق کے بعد۔ اس خاتون نے تمام پاکستانی اداکاراؤں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا یہ ہماری پاکستانی اداکارائیں ہیں  جن کے کپڑے دن بدن کم ہوتے جارہے ہیں۔

خاتون صارف نے مزید لکھا کہ سائرہ کو کیوں اپنا کام صرف اس وجہ سے چھوڑدینا چاہیئے کہ انہیں طلاق ہوگئی ہے۔ انہیں اپنی بچی کا خرچہ اٹھانا ہے اور یہ ان کا کیریئر ہے۔ لوگوں کو منفی باتوں اور مفروضوں سے پرہیز کرنے کی ضرورت ہے۔

ایک خاتون کا کہنا تھا جب معاشرے میں زیادتی کے واقعات میں اضافہ ہوتا ہے تو پھر ہم روتے کیوں ہیں۔کچھ لوگوں نےیہ اندازہ لگایا کہ  کیا سائرہ نے یہ فوٹوشوٹ اپنے سابق شوہر شہروز سبزواری کو جلانے کے لیے کیا ہے؟

جہاں لوگوں نے سائرہ کی بولڈ فوٹو شوٹ پر  کڑی تنقید کی وہیں شکیلہ نامی صارف حمایت کرتے ہوئے لکھا کہ بطور ماڈل اور اداکارہ صرف اپنی جاب کررہی ہیں۔ اس سب کا ان کے سابق شوہر سے کیا تعلق ہے؟ اس طرح کے فوٹوشوٹس وہ شادی سے پہلے اور شادی کے دوران بھی کرتی تھیں تو اب کیوں یہ اتنا مسئلہ بن گیا؟