عام انتخابات کب ہوں گے ؟ لندن بیٹھک میں بڑا فیصلہ، 48 گھنٹوں میں اعلان متوقع

مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف ، وزیراعظم شہباز شریف
کیپشن: PMLN Quaid Nawaz Sharif , PM Shehbaz Sharif
سورس: Google
Stay tunned with 24 News HD Android App
Get it on Google Play

ویب ڈیسک: مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف نے وزیراعظم  شہباز شریف کو تحریک انصاف سے سیاسی انتقام لینے سے روک دیا  ہے اور فیصلہ کیا  ہے کہ عام انتخابات اسمبلی مدت پوری ہونے پر کرائے جائیں گے۔لندن بیٹھک میں کئے گئے فیصلوں پر آئندہ 48 گھنٹوں میں عوام کو اعتماد میں لیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کی لندن میں اہم بیٹھک کا احوال سامنے آگیا ،لندن بیٹھک میں الیکشن اسمبلی مدت پوری ہونے پر کرائے جانے کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ معاشی استحکام کیلئے ضروری ہے سب کواعتمادہو، اسمبلی مدت پوری کرے گی اور عمران خان سمیت کسی بھی دوسرے دباؤ کو قبول نہیں کیا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق اسحاق ڈار کو میڈیا پر معیشت پر بات کرنے سے گریزکا مشورہ دیا ، اسحاق ڈاروزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کی رہنمائی کریں گے۔

ن لیگی ذرائع کا کہنا تھا کہ ملاقات میں مفتاح اسماعیل کو آئی ایم ایف سے اچھی ڈیل لانے کا ٹاسک دے دیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ نوازشریف نے شہباز شریف کوپی ٹی آئی سے سیاسی انتقام لینے سے سے روک دیا۔

ذرائع نے کہا کہ توہین مذہب جیسے مقدمات کے اندراج سے ن لیگ کو نقصان پہنچا لیکن پی ٹی آئی دورمیں ہونے والی بے ضابطگی موجود ہے تو کارروائی ضرور ہوگی۔

ذرائع نے بتایا کہ شاہد خاقان عباسی کو بھی معیشت میں بہتری کیلئے مشاورت کیلئے لندن بلالیا گیاہے ۔ شاہد خاقان آج دوبارہ لندن پہنچیں گے۔

خواجہ آصف کا کہنا ہے کہ معیشت پر اہم فیصلے کرلئے ہیں ، اتحادیوں سےمشاورت کےبعد 48گھنٹوں میں عوام کواعتماد میں لیں گے۔

سعدرفیق نے کہا کہ جلد فارورڈ پوزیشن میں کھیلتے نظر آئیں گے، فتنہ عمرانیہ کے نام پربدامنی پھیلانے کا موقع نہیں دیں گے۔