شہباز شریف کیخلاف ایف آئی اےمنی لانڈرنگ تحقیقات ہائیکورٹ میں چیلنج

 شہباز شریف کیخلاف ایف آئی اےمنی لانڈرنگ تحقیقات ہائیکورٹ میں چیلنج
Stay tunned with 24 News HD Android App
Get it on Google Play

سٹی42: اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے ایف آئی اے کی منی لانڈرنگ تحقیقات لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کردیں،درخواست میں ایف آئی اے کی تحقیقات کو غیر قانونی قرار دینے،درخواست کےحتمی فیصلے تک ایف آئی اے کو تحقیقات سے روکنے کی استدعا کی گئی ہے

 اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے ایف آئی اے کی منی لانڈرنگ تحقیقات لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کردیں ۔درخواست میں نیب اور ایف آئی اے کو فریق بنایا گیا ہے، درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا کہ ایف آ ئی  اے نےبد نیتی پر تحقیقات شروع کیں، جیل میں شامل تفتیش بھی کیا گیا، ایف آئی اے کی تحقیقات میں اب تک شہباز شریف کا کوئی بے نامی اکاونٹ سامنے نہیں آیا.

منی لانڈرنگ کا کیس احتساب عدالت میں زیر سماعت ہے، ایک ہی الزام پر دو کیس نہیں بنائے جاسکتے،ایف آئی اے کے چالان میں کہیں نہیں لکھا کہ ٹیلی گرافک ٹرانسفر سے قومی خزانے کو نقصان پہنچا، ایف آئی آر میں کسی نجی فرد کو بھی کو دھوکہ دینے کا الزام نہیں ہے، ایف آئی اے نے بد نیتی سے 16 ماہ تک انکوائری زیر التواء رکھی، حکومت مخالفین کو وفاداریاں تبدیل کرنے کیلئے دباؤ ڈال رہی ہے، تحقیقاتی اداروں کو سیاسی انجینئرنگ کیلئے استعمال کیا ے، شہباز شریف کی جانب سے دائر درخواست میں استدعا کی گئی کہ عدالت ایف آئی اے کی تحقیقات کو غیر قانونی قرار دینے، ایف آئی آر نمبر 39/20 کو خارج کرنے اور درخواست کے حتمی فیصلے تک ایف آئی اے کو تحقیقات سے روکنے کا حکم دے