زیرزمین پانی کا آلودگی سے بچاؤ، متعلقہ محکموں کو 15روز کی حتمی مہلت

زیرزمین پانی کا آلودگی سے بچاؤ، متعلقہ محکموں کو 15روز کی حتمی مہلت

درنایاب: شہرمیں زیرزمین پانی کوآلودہ ہونے سے بچانے کیلئےعملی اقدامات کیلئے واٹرکمیشن نے محکموں کو پندرہ روزکی حتمی مہلت دیدی ہے، افسران کی عدم توجہ پرچیف سیکرٹری کوخط لکھنےکی ہدایت بھی کردی گئی۔

تفصیلات کے مطابق چئیرمین واٹرکمیشن جسٹس ریٹائرڈعلی اکبر قریشی کی زیر صدارت اجلاس واسا ہیڈ آفس گلبرگ میں ہوا، ایم ڈی واسا سید زاہدعزیز، رجسٹرار کوآپریٹیو ڈاکٹر فیصل ظہور، اسسٹنٹ کمشنراسامہ شیرون نیازی، پولیس، ڈولفن، ہاوسنگ، انڈسٹری، پی ایچ اے کے نمائندوں سمیت دیگرافسران شریک ہوئے۔

چئیرمین واٹرکمیشن نےافسران اورفوکل پرسنزکی عدم شرکت پراداروں کوآڑھےہاتھوں لیا، انہوں نے کہا کہ کوآپریٹیو ڈیپارٹمنٹ کے زیرانتظام سوساٹیزکیخلاف سنجیدہ ایکشن لیا جائے جبکہ فالواَپ ٹیمزمحکموں کی رپورٹ کوکراس چیک بھی کیا جائے گا۔

چئیرمین نے انکشاف کیا کہ پنجاب کےعلاقے ماموں کانجن میں اسی فیصد لوگوں کو ہیپاٹائٹس ہےجبکہ لاہورشہرمیں انڈسٹری ویسٹ زمین میں ڈالاجارہاہے، کسی صورت بھی زیرزمین پانی کوزہریلا ہونے نہیں دیں گے، خلاف ورزی پر مقدمات درج کرائیں گے۔