ایل پی جی کی قیمتوں میں اضافے نے شہریوں کو لکڑیاں جلانے پر مجبور کر ڈالا

ایل پی جی کی قیمتوں میں اضافے نے شہریوں کو لکڑیاں جلانے پر مجبور کر ڈالا


 (زبیر اعوان):سردی کے آتے ہی گیس کو بریک لگ گئی۔ ایل پی جی کی قیمتوں کا گراف بلند ہوا تو شہری لکڑی خریدنے بھاگے۔ لکڑی فروشوں نے بھی شہریوں کا رش دیکھ کر لکڑی کے دام بے لگام کر ڈالے۔

یہ بھی لازمی پڑھیں:نیوز بلیٹن 3بجے 14 نومبر2018  

ایک عام شہری نے ایل پی جی کی قیمتیں بڑھنے سے لکڑی فروش کا رخ کر لیا، گیس نے ایک بار پھر سے لکڑی جلانے پر مجبور کر ڈالا ہے۔ ٹال پر ذرا سا گاہکوں کا رش جو بڑھا تو لکڑی فروش نے لکڑی کے دام بے لگام کر ڈالے۔ ابھی پچھلے سال تو یہی لکڑی پانچ سو روپے من کے حساب سے بیچی جا رہی تھی مگر اس سال دو سے تین سو کے اضافے کے ساتھ کہیں سات تو کہیں آٹھ سو بیچی جا رہی ہے۔گاہک آتے اور پیسے ملتے دیکھ کر دکاندار کی بھی بتیسی اندر جانے کا نام نہیں لے رہی۔ خوشی سے پھولا نہیں سما رہا۔لکڑی کی قیمتوں میں جس تیزی سے اضافہ ہوا ہے لگتا یہ ہے آنے والے سالوں میں یہ بھی سونے کے مول بیچی جاے گی۔