مرغی کا گوشت 32 روپے مہنگا ہوگیا

سٹی42: شہر لاہور میں برائلر کی رسد میں کمی  کے باعث  قیمت میں حیرت انگیز اضافہ ریکارڈ کیا گیا اورمرغی کا گوشت 32 روپے فی کلو مہنگا ہوگیا اور فارمی انڈے 97 روپے  فی درجن پر مستحکم، تاہم پولٹری فارمرز کاُ کہنا ہے کہ غیر یقینی صورتحال کے باعث  قیمت کم ہوئی تھی اب برائلر کی  قیمت واپس اصل صورتحال پر آ رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق شہر لاہور میں برائلر کی رسد میں کمی سے قیمت میں پھر سے اضافہ ہوگیا ہے، زندہ مرغی 22 روپے  اضافے کے بعد 176 روپے کلو فروخت جبکہ مرغی کا گوشت 32 روپے اضافے کے بعد 255 روپے فی کلو کا ہوگیا اور فارمی انڈے 97 روپے  فی درجن پر مستحکم۔ دو روز میں مرغی کا گوشت 48 روپے فی کلو مہنگا ہوا۔

یاد  رہے  کہ گزشتہ ماہ  شہر میں برائلر کی  قیمت میں نمایاں کمی ریکارڈ کی گئی تھی اور مرغی کا گوشت ایک ہفتے میں 28 روپے فی کلو تک سستا ہوا تھا  لیکن یہ کمی اس طرہ سے برقرار نہ رہ سکی اور آج سوموار کے  روز شہر میں زندہ  مرغی 22 روپے  اضافے کے بعد 176 روپے جبکہ  مرغی کا گوشت32 روپے اضافے کے بعد 255 روپے فی کلو مہنگا ہوا ہے اور اگر بات کی جائے فارمی انڈوں کی تو فارمی انڈے 97 روپے  فی درجن پر مستحکم ہیں۔

یاد رہے کہ ماہ رمضان کی آمد کے ساتھ ہی شہر میں منافع خور مافیا  بھی سرگرم ہوگیا ہے اور سرکاری نرخنامے پر ہی آلو، پیاز، لہسن، ادرک سمیت دیگر سبزیوں کی قیمتوں میں اضافہ کر دیا گیا، اضافہ کی وجہ سے شہریوں کو پریشانی کا سامنے ہے، ضلعی انتظامیہ نے بھی چپ سادہ لی ہے اور منافع خور اپنی تجوریاں بھرنے میں مصروف ہیں۔

دوسری جانب حکومت کی جانب سے یوٹیلیٹی سٹورز پر رمضان پیکج کے اعلان کے باوجود اشیا کی قلت دور نہ ہوسکی، شہری یوٹیلیٹی سٹورز پر کھجوریں، دالوں، مصالحہ جات، درجہ اول کے گھی کوکنگ آئل سمیت دیگر اشیا کی فراہمی نہ ہونے کی شکایت کرتے رہے۔