’’24نیوز کے لائسنس کی معطلی حکومت کی آمرانہ سوچ کی عکاس ہے‘‘

’’24نیوز کے لائسنس کی معطلی حکومت کی آمرانہ سوچ کی عکاس ہے‘‘

پیمرا کا آزادی صحافت پربڑا وار، ٹوئنٹی فور نیوز کا لائسنس معطل کردیا گیا، مسلم لیگ (ن)  کے رہنما خواجہ عمران نذیر کی پیمرا کے اقدام کی شدید مذمت، ٹوئیٹر پیغام میں کہا کہ پیمرا کی وساطت سے حکومت نے آزادی صحافت پر ایک اور وار کیا ہے کہ، ٹوئینٹی فور نیوز کے لائسنس کی معطلی حکومت کی آمرانہ سوچ کی عکاس ہے۔

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ (ن)  کے رہنما خواجہ عمران نذیر  نے  پیمرا کے اقدام کی شدید مذمت کی ہے اور انہوں نے اپنے ٹویٹر پیغام میں کہا کہ پیمرا کی وساطت سے حکومت نے آزادی صحافت پر ایک اور وار کیا ہے کہ ٹوئینٹی فور نیوز کے لائسنس کی معطلی حکومت کی آمرانہ سوچ کی عکاس ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ حکومت ان ہتھکنڈوں سے اپنی نا اہلی پر پردہ ڈالنا چاہتی ہے، ہم ٹوئینٹی فور پر قدغن کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں.

 دوسری جانب  سینئر صحافی حامد میر کا کہنا تھا کہ میڈیا انڈسٹری پہلے ہی شدید بحران کا شکار ہے، حکومت کو ایسا کوئی اقدام نہیں اٹھانا چاہیے، عمران خان میڈیا  کے خلاف کارروائیاں کررہے ہیں، ایسے اقدامات سے دنیا بھر میں ملک کی بدنامی ہو گی، حکومت نے  آزاد  میڈیا کا گلا گھونٹ دیا ہے،  فوری انصاف  کے لئے  عدلیہ سے رجوع کریں گے، عدلیہ سے انصاف نہ ملا تو سڑکوں پر  آئیں گے۔

سینئر صحافی کا کہنا تھا کہ میڈیا نےعمران خان کا پورا ساتھ دیا اور  آج اسے سلب کیا جارہا ہے، 2002 میں حکومت کو ناراض کرکے عمران خان کا ساتھ دیا اور  اس وقت عمران خان پارٹی کے واحد ایم این اے تھے، مشرف کا وکیل عمران خان کا ساتھی بن گیا جبکہ عمران خان کہتے تھے اسٹیٹس کو  توڑیں گے۔