میاں بیوی نہیں ماں باپ بن کر فیصلہ کرو، عدالت نے جوڑے کی صلح کرادی

میاں بیوی نہیں ماں باپ بن کر فیصلہ کرو، عدالت نے جوڑے کی صلح کرادی
کیپشن: Couple
Stay tuned with 24 News HD Android App
Get it on Google Play

سٹی 42:سیشن عدالت نے ناراض میاب بیوی میں سمجھوتہ کرادیا، عامر ٹاؤن ہربنس پورہ کی رہائشی بشری بی بی نے اپنی بچی کی بازیابی کیلئے درخواست دائر کی تھی۔ درخواست میں استدعا کی تھی کہ میرے تین بچے ہیں دو بچے میرے پاس ہیں ایک بچی خاوند کے پاس ہے،  میری چھ سالہ  بچی سکینہ خاوند سے بازیاب کرکے مجھے دلائی جائے۔ 

تفصیلات کے مطابق ایڈیشنل سیشن جج محمد سعید نے درخواست پر سماعت کی، عدالت کے حکم پر خاوند اپنی بیٹی کے ساتھ پیش ہوا، عدالت نے میاں بیوی کو سمجھوتہ کا موقع دیا  اور کہا کہ چھوٹی موٹی ناراضگیاں بھول کر صلح کر لو ، طلاق سے آپ کے بچوں کی زندگی تباہ ہو جائے گی،  میاں بیوی نہیں ماں باپ بن کر فیصلہ کرو ۔ عدالت کے سمجھانے پر میاں بیوی صلح کرنےپر راضی ہو گئے۔ خاوند محمد علیم اور بیوی بشری بی بی نے ایک ساتھ رہنے کا عہد کیا اور ایک ساتھ عدالت سے گھر کیلئے رخصت ہوئے۔

Malik Sultan Awan

Content Writer